اضافی کرایوں کے باعث سعودی عرب واپس جانے سے قاصر پاکستانی محنت کشوں کی سن لی گئی

لاہور(نیوز ڈیسک)چیف ایگزیکٹو آفیسر ارشد ملک نے پی آئی اے کی سعودیہ عرب کی پروازوں میں اضافی کرائے وصولی کی شکایات کا سختی سے نوٹس لیتے ہوئے ایکشن لینے کی ہدایات جاری کر دی ہیں ۔ پی آئی اے ترجمان کے مطابق کچھ ایجنٹس اور عناصر نے زیادہ طلب سے فائدہ اٹھا کہ اضافی کرایہ وصول کرناشروع کردیا ہے ، پی آئی اے کا کرایہ بشمول تمام ٹیکسز 84000روپے ہے ، پرانے ٹکٹس کی ان پروازوں پر ری اکاموڈیشن صرف 100 ڈالر ادا کرکے کروائی جاسکتی ہے ،کوئی بھی ایجنٹ چار سے پانچ ہزار سے زائد کمیشن وصول نہیں کرسکتا جو کہ 84000 کے کرائے میں شامل ہے ۔

ترجمان نے کہا کہ کہ مسافر ٹکٹ کی خریداری کے لئے اس سے زائد ہرگز ادائیگی نہ کریں اور اگر کوئی اس سے زیادہ طلب کرتا ہے تو فوری طور پر پی آئی اے کو [email protected] پر رپورٹ کریں ۔ترجمان کے مطابق پی آئی اے نے مسافروں کی سہولت کیلئے 28 مزید پروازوں کی اجازت طلب کررکھی ہے اس سلسلے میں پی آئی اے انتظامیہ مسلسل سعودی حکام سے رابطے میں ہے۔ ایک یا دو دن تک اجازت ملنے کے بعد نشستیں آرام سے دستیاب ہوں گی اس لئے جو مسافر ابھی تک ٹکٹ حاصل نہیں کر پائے ان سے درخواست ہے وہ دو دن انتظار کرلیں اور آرام سے ٹکٹ حاصل کریں ۔ترجمان کے مطابق ہمیں ادراک ہے کہ زیادہ تر مسافروںکے اقامے 30 ستمبر سے پہلے معیاد پوری کررہے ہیں اسی لئے ہم نے 20 تا 30 ستمبر کے درمیان اضافی پروازوں کی درخواست کی ہے ۔پی ائی اے کی جانب سے پروازوں کی تیاری مکمل ہے اور اجازت ملتے ہی ٹکٹیں بکنگ کیلئے سسٹم میں دستیاب ہوں گی ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں